کراچی دھماکے کے مشتبہ دہشت گرد کا ساتھی حیدرآباد سے گرفتار

کراچی دھماکے کے مشتبہ دہشت گرد کا ساتھی حیدرآباد سے گرفتار

حیدرآباد: کاؤنٹر ٹیررازم ڈپارٹمنٹ (سی ٹی ڈی) نے حیدرآباد میں ایک چھاپے کے دوران منظور حسین کو گرفتار کرلیا، جو کہ کراچی کے صدر بم دھماکے کے مبینہ ملزم کا ساتھی ہے۔

سی ٹی ڈی کے ترجمان نے ایک بیان میں کہا کہ منظور حسین کو حیدرآباد کی سبحان کالونی سے گرفتار کیا گیا جو کراچی کے علاقے ماڑی پور میں مقابلے میں مارے گئے مشتبہ دہشت گرد کا ساتھی تھا۔

ترجمان نے مزید کہا کہ منظور حسین ریلوے ٹریک بم دھماکے کے واقعے میں بھی ملوث ہے۔ گرفتار ملزم ریاست مخالف اور دہشت گردی کی کارروائیوں میں ملوث تھا۔ معلوم ہوا کہ ملزم نے 23 مارچ کو آئی ای ڈی دھماکہ کرنے کی ناکام کوشش بھی کی تھی۔

18 مئی کو کاؤنٹر ٹیررازم ڈیپارٹمنٹ (سی ٹی ڈی) نے انٹیلی جنس ایجنسیوں کے ساتھ مل کر کراچی میں علیحدگی پسند گروپ سے وابستہ دو دہشت گردوں کو گولی مار کر ہلاک کرنے کا دعویٰ کیا تھا۔

سی ٹی ڈی اور انٹیلی جنس ایجنسی کے مشترکہ چھاپے میں مارا گیا مبینہ دہشت گرد کراچی کے علاقے صدر میں ہونے والے بم دھماکے کا سرغنہ نکلا۔

مزید پڑھیں:گجرات میں پاکستانی نژاد ہسپانوی بہنوں کو غیرت کے نام پر قتل کردیا گیا

ذرائع نے بتایا کہ ”آج کے چھاپے کے دوران مارے گئے اللہ ڈنو اور نواب دونوں کا تعلق تھرپارکر کے علاقے سے تھا اور ان کا تعلق ایک کالعدم قوم پرست تنظیم، SRA سے تھا،”۔

تبصرے: 0

آپ کا ای میل پتہ شائع نہیں کیا جائے گا۔ مطلوبہ فیلڈز * کے ساتھ نشان زد ہیں