رمضان کا تحفہ، حکومت نے ایل پی جی کتنی سستی کردی؟

موسم

قیمتیں

ٹرانسپورٹ

کراچی :حکومت نے ایل پی جی1روپے فی کلو، گھریلو سلنڈ 10روپے اور کمرشل سلنڈرکی قیمت37روپے کمی کردی، اوگرا نے ماہ2024مارچ کیلئے ایل پی جی کی قیمت میں کمی کا نوٹیفیکیشن جاری کردیا۔

سرکاری پیداواری قیمت میں 683 روپے فی میٹرک ٹن کمی۔ اب ایل پی جی258 روپے فی کلوکی جگہ257روپے فی کلو، گھریلو سلنڈر3040روپے کی جگہ3030روپے اور کمرشل سلنڈر11695 روپے کی جگہ11658روپے، پیداواری قیمت178632کی جگہ177950روپے ملک بھر میں دستیاب ہو گی۔

چیئرمین ایل پی جی انڈسٹریز ایسوسی ایشن عرفان کھوکھر نے کہا ہے کہ قدرتی گیس کی قیمت میں بے پناہ اضافے اور قدرتی گیس کے شارٹ فال کے باعث ایل پی جی پر منتقل ہورہی ہے، بہت جلد صارف اپنے میٹر اتار دیں گے۔

انہوں نے کہا کہ ملک میں 6000میٹرک ٹن ایل پی جی کی یومیہ پیداوار ہے جبکہ مقامی کھپت 150000ٹن سے تجاوز کرگئی ہے۔ مقامی ضرورت کے لیے 60فیصد درآمدی ایل پی جی پر انحصار ہوگیا ہے۔JJVL جام شورو جوائنٹ وینچر کی بندش سے حکومت کواربوں روپے کے نقصان کا سامنا اور عوام کو مہنگی گیس خریدنا پڑرہی ہے۔

عرفان کھوکھر نے بتایا کہ ایل پی جی ڈسٹری بیوٹرز اربوں روپے ٹیکس دیتے ہیں،ایل این جی کی طرح ایل پی جی کو بھی ٹیکس فری کیا جائے اورایل پی جی پر لگے بے جا ٹیکسیس کا خاتمہ کیا جائے۔اگرایل پی جی انڈسٹری کیساتھ ایل این جی کی طرح برتاؤ کیا جائے تو ہم ہر گھر میں سوئی گیس سے کم قیمت پر ایل پی جی فراہم کریں گے۔

ایل پی جی واحدسستا فیول ہے جو کہ قدرتی گیس کی کمی کو پورا کرنے کی صلاحیت رکھتا ہے۔ تمام ایل پی جی ڈسٹری بیوٹرز اوگرا کی مقرر کردہ قیمت پر ایل پی جی فروخت کریں ۔