نائیجیریا: جشن میلاد النبیﷺ کی تقریب پر ڈرون حملہ، 85 شہید

جشن میلاد النبیﷺ کی تقریب پر نائیجیریا کی فوج نے غلطی سے ڈرون حملہ کردیا جس کے نتیجے میں 85 افراد شہید ہوگئے۔

عرب میڈیا کا کہنا ہے کہ اتوار کی رات کو ریاست کدوناکی ایگابی کونسل کے علاقے میں نائیجیریا کی فوج کی جانب سے غلطی سے ڈرون حملہ اس وقت ہوا جب مقامی مسلمان نبی کریم صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کے یوم ولادت کی مناسبت سے منعقد کی گئی تقریب میں جمع تھے۔

حکام کا کہنا تھا کہ نائیجیریا کے ایک فوجی حملے جس میں باغیوں کو نشانہ بنانے کے لیے ڈرون کا استعمال کیا گیا لیکن وہ غلطی سے مذہبی تقریب پر گرگیا اور کم از کم 85 شہری شہید اور متعدد زخمی ہوئے۔

نیشنل ایمرجنسی مینجمنٹ ایجنسی نے منگل کو ایک بیان میں کہا کہ اب تک 85 لاشوں کی تدفین ہوچکی ہے، جبکہ دیگر افراد کی تلاش ابھی بھی جاری ہے۔

جاپان کا طالبان حکومت کو کروڑوں ڈالر کی بھاری امداد دینے کا اعلان

دوسری جانب ایمنسٹی انٹرنیشنل کے نائیجیریا کے دفتر نے ڈرون حملے میں 120 افراد کے شہید ہونے کی رپورٹ دی ہے جس میں زیادہ تر بچے شامل ہیں۔