مردم شماری کا معاملہ مؤخر، وزیر اعظم کا آصف زرداری سے ملاقات کا فیصلہ

موسم

قیمتیں

ٹرانسپورٹ

گوگل نیوز پر ہمیں فالو کریں

اسلام آباد: مشترکہ مفادات کونسل (سی سی آئی) میں نئی مردم شماری کا معاملہ پیپلز پارٹی کے اعتراض کے بعد مؤخر کردیا گیا۔ وزیر اعظم نے آصف علی زرداری سے ملاقات کا فیصلہ کیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق وزیر اعظم نے ڈیجیٹل مردم شماری 2023 کے نتائج کی منظوری کیلئے مشترکہ مفادات کونسل کا اجلاس آج طلب کیا تھا۔ وزیر اعظم نے وزارتِ پلاننگ اینڈ ڈویلپمنٹ کی جانب سے بھیجی گئی سمری منظور کر لی۔

یہ بھی پڑھیں:

لوئر دیر میں طوفانی بارش سے کاروباری مراکز ڈوب گئے

سمری میں ڈیجیٹل مردم شماری کے نتائج کی منظوری کیلئے سی سی آئی کا اجلاس بلانے کا مطالبہ شامل تھا۔ محکمۂ شماریات نے مردم شماری مکمل کرکے اس کے نتائج بھی مرتب کرلیے تھے جو سی سی آئی کو بھیجے گئے۔

 ڈیجیٹل مردم شماری کے نتائج کی منظوری  کی صورت میں خدشہ  تھا  کہ آئندہ عام انتخابات میں کم از کم 3 سے 4 ماہ کی تاخیر ہوسکتی ہے۔ وزیر اعظم آصف علی زرداری سے ملاقات کیلئے ان کی رہائش گاہ جائیں گے۔

وزیر اعظم کی زیرِ صدارت مشترکہ مفادات کونسل کا اجلاس ختم ہوگیا۔ مردم شماری کے نتائج پر وفاقی ادارۂ شماریات سے مزید وضاحت طلب کرتے ہوئے ادارے کو مزید اعدادوشمار پیش کرنے کی ہدایت بھی کردی گئی۔

نئی ڈیجیٹل مردم شماری کی منظوری نہ ہوسکی۔ توقع کی جارہی ہے کہ وزیر اعظم شہباز شریف سابق صدر آصف علی زرداری کی رہائش گاہ پر ان سے ملاقات کے بعد پی پی پی کے اعتراض سمیت دیگر سیاسی امور پر گفتگو کریں گے۔ 

 

Related Posts