پاکستان اسٹاک ایکس چینج،سرمایہ کاری مالیت میں 32 ارب سے زائد کی کمی

کراچی:پاکستان اسٹاک ایکس چینج میں منگل کو اتار چڑھاوٗ کا سلسلہ جاری رہنے کے بعد مندی غالب آگئی جس کے نتیجے میں کے ایس ای100انڈیکس 154.68پوائنٹس کی کمی سے 48147.98پوائنٹس کی سطح پر آگیا۔

63.50 فیصد کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں کمی ریکارڈکی گئی جس کے باعث مارکیٹ کی سرمایہ کاری مالیت میں 32 ارب15کروڑ85لاکھ روپے کی کمی ہوئی تاہم حصص کی لین دین کے لحاظ سے کاروباری حجم پیرکی نسبت 11.15فیصدزائد رہا۔

گز شتہ روزٹریڈنگ کے آغاز سے ہی سرمایہ کار تذبذب کا شکار نظر آئے اور دوران ٹریڈنگ حصص وقفے وقفے سے کی خریداری اور فروخت کے مختلف رجحانات دیکھنے میں آئے جس کے سبب کے ایس ای100انڈیکس48409پوائنٹس کی بلند اور 48ہزار کی نچلی سطح پر ریکارڈ کیا گیا۔

تاہم مجموعی طور پر مندی کے اثرات غالب آگئے اور کاروبار کے اختتام پرکے ایس ای100انڈیکس 154.68پوائنٹس کی کمی سے 48147.98پوائنٹس پر بند ہواجب کہ83.19پوائنٹس کی کمی سے کے ایس ای30انڈیکس 19574.92پوائنٹس اورکے ایس ای آل شیئرا نڈیکس98.15پوائنٹس کی کمی سے32634پوائنٹس کی سطح پرآگیا۔

گزشتہ روزمجموعی طور پر 422کمپنیوں کا کاروبار ہوا جس میں سے139کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں اضافہ268میں کمی اور 15کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں استحکام رہا۔

بیشتر کمپنیوں کی قیمتوں میں کمی آنے کے باعث مارکیٹ کی سرمایہ کاری مالیت83کھرب92ارب54کروڑ66لاکھ روپے سے گھٹ کر83کھرب60ارب38کروڑ81لاکھ روپے ہو گئی جب کہ حصص کی لین دین کے لحاظ سے کاروباری حجم ایک ارب 4کروڑ5لاکھ 23ہزارشیئر رہاجو پیرکی نسبت 10کروڑ44لاکھ34ہزارشیئرززائدہے۔