MM NEWS URDU
Friday 27th January 2023 / 5 Rejab 1444

بھارت سلامتی کونسل میں کشمیر کو دوطرفہ تنازعہ ثابت کرنے میں ناکام رہا، شاہ محمود قریشی

امریکی صدر جوبائیڈن کی انتظامیہ افغان امن عمل کو برقرار رکھے: شاہ محمود قریشی

امریکی صدر جوبائیڈن کی انتظامیہ افغان امن عمل کو برقرار رکھے: شاہ محمود قریشی

اسلام آباد: وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا کہ بھارت اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کو یہ باور کرانے میں ناکام رہا کہ جموں وکشمیر تنازعہ دو طرفہ مسئلہ ہے۔

اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کے اجلاس کے بعد اپنے وزیر خارجہ نے کہا کہ ہندوستان نے اس بحث کو روکنے اور اجلاس کی اہمیت کو کم سے کم کرنے کے لئے سخت کوششیں کیں ۔

انہوں نے کہا کہ مقبوضہ جموں و کشمیر کی صورتحال پر تبادلہ خیال کرنے کے لئے سلامتی کونسل نے اپنی قراردادوں کی توثیق کی ہے کہ اس تنازعے کاحتمی حل اقوام متحدہ کے زیراہتمام ایک آزاد اور غیر جانبدارانہ رائے شماری کے ذریعے کیاجائے گا۔

وزیر خارجہ نے کہا کہ میں ہندوستان کو یہ یاد دلانا چاہوں گا کہ بھارت وہ 5 اگست 2019 سے جاری غیر قانونی اقدامات کے ذریعے کشمیریوں  کے جذبہ آزادی کو ختم نہیں کرسکتا۔

مزید پڑھیں:سلامتی کونسل کا مقبوضہ کشمیر کی موجودہ صورتحال پر گہری تشویش کا اظہار

انہوں نے کہا کہ بھارتی قابض افواج نے مقبوضہ کشمیر اور لائن آف کنٹرول کے پار سیز فائر کی خلاف ورزیوں کی وجہ سے جنوبی ایشیاء کے امن اور سلامتی کو شدید خطرے میں ڈال دیا ہے۔

کیا آپ بھی جعلی خبروں سے پریشان ہیں؟ تو ڈاؤن لوڈ کریں ایم ایم نیوز کی اپلیکیشن اور جانبدار خبروں سے جان جھڑائیں
Exit mobile version