لاہور، معروف کالم نگار نذیر ناجی کی نمازِ جنازہ ادا

موسم

قیمتیں

ٹرانسپورٹ

لاہور: مشہورومعروف تجزیہ کار، صحافی اور کالم نگار نذیر ناجی کی نمازِ جنازہ ادا کردی گئی ہے۔ ان کا انتقال گزشتہ شب 81سال کی عمر میں ہوا۔

تفصیلات کے مطابق نذیر ناجی کی نمازِ جنازہ لاہور کے علاقے جوہر ٹاؤن میں ادا کی گئی جس میں دنیا میڈیا گروپ کے چیئرمین میاں عامر محمود، رکنِ اسمبلی ملک سیف الملوک اور دیگر معروف شخصیات شریک ہوئیں۔

نمازِ جنازہ کے بعد نذیر ناجی کو جوہر ٹاؤن کے مقامی قبرستان میں سپردِ خاک کردیا۔ 81 سالہ نذیر ناجی 2012 سے مشہورومعروف اخبار میں کالم نگار کے طور پر مضامین لکھ رہے تھے اور گروپ ایڈیٹر سمیت دیگر عہدوں پر بھی فرائض انجام دئیے۔

اردو کے سینئر کالم نگار نذیر ناجی نے پاکستان اکیڈمی آف لیٹرز کی سربراہی بھی کی اور 27 سال سے زائد عرصے سے مقامی روزنامے سے وابستہ تھے۔ نذیر ناجی کے کالمز اور مضامین کو عوام و خواص دونوں میں یکساں مقبولیت حاصل تھی۔

مرحوم نذیر ناجی صحافتی خدمات کے اعتراف میں ہلالِ امتیاز سے بھی نوازے گئے۔ بطور کالم نگار نذیر ناجی نے نوائے وقت میں بھی طویل وقت تک کالمز لکھے اور دنیا نیوز سے بھی بطور گروپ ایڈیٹر خدمات سرانجام دیں۔

نگران وزیر اعلیٰ پنجاب محسن نقوی سمیت دیگر سیاسی و سماجی شخصیات نے نذیر ناجی کے انتقال پر افسوس کا اظہار کیا ہے۔ نذیر ناجی معروف تجزیہ کار اور اینکر پرسن انیق ناجی کے والد تھے۔ وزیر اطلاعات عامر میر نے بھی ان کے انتقال پر تعزیت کی ہے۔